In the Name of Allah, The Most Gracious, Ever Merciful.

Love for All, Hatred for None.

Browse Al Islam

Back Quran Search Home

The Holy Quran : Chapter 2: Al-Baqarah البَقَرَة

English Translation by Maulvi Sher Ali (ra)      اردو ترجمہ [حضرت مرزا طاہر احمد، خلیفۃ المسیح الرابع]
Get flash to see this player.

[2:243] Thus does Allah make His commandments clear to you that you may understand.
[2:243] اسی طرح اللہ اپنے نشانات تمہارے لئے کھول کھول کر بیان کرتا ہے تاکہ تم عقل کرو۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر



[2:244] Dost thou not know of those who went forth from their homes, and they were thousands, fearing death? And Allah said to them: ‘Die;’ then He brought them to life. Surely, Allah is Munificent to men, but most men are not grateful.
[2:244] کیا تجھے ان لوگوں کی اطلاع نہیں جو موت کے ڈر سے اپنے گھروں سے نکلے، اور وہ ہزاروں کی تعداد میں تھے۔ تو اللہ نے ان سے کہا تم موت قبول کرو۔ اور پھر (اس طرح) انہیں زندہ کر دیا۔ یقینا اللہ لوگوں پر بہت فضل کرنے والا ہے لیکن اکثر لوگ (اس کا) شکر ادا نہیں کرتے۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

[2:245] And fight in the cause of Allah and know that Allah is All-Hearing, All-Knowing.
[2:245] اور اللہ کی راہ میں قتال کرو اور جان لو کہ اللہ بہت سننے والا (اور) دائمی علم رکھنے والا ہے۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

[2:246] Who is it that will lend Allah a goodly loan that He may multiply it for him manifold? And Allah receives and enlarges, and to Him shall you be made to return.
[2:246] کون ہے جو اللہ کو قرضہ حسنہ دے تاکہ وہ اس کے لئے اسے کئی گنا بڑھائے۔ اور اللہ (رزق) قبض بھی کر لیتا ہے اور کھول بھی دیتا ہے۔ اور تم اسی کی طرف لوٹائے جاؤ گے۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

[2:247] Hast thou not heard of the chiefs of the children of Israel after Moses, when they said to a Prophet of theirs: ‘Appoint for us a king that we may fight in the cause of Allah?’ He said: ‘Is it not likely that you will not fight, if fighting is prescribed for you?’ They said: ‘What reason have we to abstain from fighting in the cause of Allah when we have been driven forth from our homes and our sons?’ But when fighting was ordained for them, they turned back except a small number of them. And Allah knows the transgressors well.
[2:247] کیا تُونے موسیٰ کے بعد بنی اسرائیل کے سرداروں کا حال نہیں دیکھا۔ جب انہوں نے اپنے ایک نبی سے کہا کہ ہمارے لئے ایک بادشاہ مقرر کر تاکہ ہم اللہ کی راہ میں قتال کریں۔ اس نے کہا۔ کہیں تم ایسے تو نہیں کہ اگر تم پر قتال فرض کیا جائے تو تم قتال نہ کرو۔ انہوں نے کہا آخر ہمیں ہوا کیا ہے کہ اللہ کی راہ میں قتال نہ کریں جبکہ ہم اپنے گھروں سے نکالے گئے ہیں اور اپنی اولاد سے جدا کئے گئے ہیں۔ پس جب (بالآخر) قتال ان پر فرض کر دیا گیا تو ان میں سے معدودے چند کے سوا سب نے پیٹھ پھیر لی۔ اور اللہ ظالموں کو خوب جانتا ہے۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

[2:248] And their Prophet said to them: ‘Allah has appointed for you Talut as a king.’ They said: ‘How can he have sovereignty over us while we are better entitled to sovereignty than he, and he is not given abundance of wealth?’ He said: ‘Surely, Allah has chosen him above you and has increased him abundantly in knowledge and body.’ And Allah gives sovereignty to whom He pleases and Allah is Bountiful, All-Knowing.
[2:248] اور ان کے نبی نے ان سے کہا کہ یقیناً اللہ نے تمہارے لئے طالوت کو بادشاہ مقرر کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس کو ہم پرحکومت کا حق کیسے ہوا جبکہ ہم اس کی نسبت حکومت کے زیادہ حقدار ہیں اور وہ تو مالی و سعت (بھی) نہیں دیا گیا۔ اُس (نبی) نے کہا یقینا اللہ نے اسے تم پر ترجیح دی ہے اور اُسے زیادہ کردیا ہے علمی اور جسمانی فراخی کے لحاظ سے۔ اور اللہ جسے چاہے اپنا ملک عطا کرتا ہے اور اللہ وسعت عطا کرنے والا (اور) دائمی علم رکھنے والا ہے۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

[2:249] And their Prophet said to them: ‘The sign of his sovereignty is that there shall be given you a heart wherein there will be tranquillity from your Lord and a legacy of good left by the family of Moses and the family of Aaron — the angels bearing it. Surely, in this there is a Sign for you if you are believers.’
[2:249] اور ان کے نبی نے ان سے کہا کہ یقیناً اس کی بادشاہت کی نشانی یہ ہے کہ وہ صندوق تمہارے پاس آئے گا جس میں تمہارے ربّ کی طرف سے سکینت ہو گی، اور (اس چیز کا) بقیہ ہو گا جو موسیٰ کی آل اور ہارون کی آل نے (اپنے پیچھے) چھوڑا۔ اسے فرشتے اٹھائے ہوئے ہوں گے۔ یقیناً اس میں تمہارے لئے (ایک بڑا) نشان ہے اگر تم ایمان رکھتے ہو۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر



[2:250] And when Talut set out with the forces, he said: ‘Surely, Allah will try you with a river. So he who drinks therefrom is not of me; and he who tastes it not is assuredly of me, except him who takes a handful of water with his hand.’ But they drank of it, except a few of them. And when they crossed it — he and those who believed along with him — they said: ‘We have no power today against Jalut and his forces.’ But those who knew for certain that they would one day meet Allah said: ‘How many a small party has triumphed over a large party by Allah’s command! And Allah is with the steadfast.’
[2:250] پس جب طالوت لشکر لے کر روانہ ہوا تو اس نے کہا کہ یقیناً اللہ تمہیں ایک دریا کے ذریعے آزمانے والا ہے۔ پس جس نے اس میں سے پیا اس کا مجھ سے تعلق نہیں رہے گا۔ اور جس نے اسے (سیر ہوکر) نہ پیا تو وہ یقینا میرا ہے سوائے اس کے جو ایک آدھ مرتبہ چُلو بھر کر پی لے۔ پھر بھی معدودے چند کے سوا ان میں سے اکثر نے اس میں سے پی لیا۔ پس جب وہ اُس (دریا) کے پار پہنچا اور وہ بھی جو اس کے ساتھ ایمان لائے تھے تو وہ (نافرمان) بولے کہ آج جالوت اور اس کے لشکر سے نمٹنے کی ہم میں کوئی طاقت نہیں۔ (تب) اُن لوگوں نے جو یقین رکھتے تھے کہ وہ اللہ سے ملنے والے ہیں کہا کہ کتنی ہی کم تعداد جماعتیں ہیں جو اللہ کے حکم سے کثیر التعداد جماعتوں پر غالب آگئیں۔ اور اللہ صبر کرنے والوں کے ساتھ ہوتا ہے۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

[2:251] And when they issued forth to encounter Jalut and his forces, they said: ‘O our Lord, pour forth steadfastness upon us, and make our steps firm, and help us against the disbelieving people.’
[2:251] پس جب وہ جالوت اور اس کے لشکر کے مقابلہ کے لئے نکلے تو انہوں نے کہا اے ہمارے ربّ! ہم پر صبر نازل کر اور ہمارے قدموں کو ثبات بخش اور کافر قوم کے خلاف ہماری مدد کر۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

[2:252] So they routed them by the command of Allah; and David slew Jalut, and Allah gave him sovereignty and wisdom, and taught him of what He pleased. And had it not been for Allah’s repelling men, some of them by the others, the earth would have become filled with disorder. But Allah is Munificent to all peoples.
[2:252] پس انہوں نے اللہ کے حکم سے انہیں شکست دے دی۔ اور داؤد نے جالوت کو قتل کر دیا۔ اور اللہ نے اسے ملک اور حکمت عطا کئے اور اُسے جو چاہا اُس کی تعلیم دی۔ اور اگر اللہ کی طرف سے لوگوں کو ایک دوسرے کے ہاتھوں بچانے کا سامان نہ کیا جاتا تو زمین ضرور فساد سے بھر جاتی۔ لیکن اللہ تمام جہانوں پربہت فضل کرنے والا ہے۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

 Previous Page
 
 
 Next Page