In the Name of Allah, The Most Gracious, Ever Merciful.

Love for All, Hatred for None.

Browse Al Islam

Back Quran Search Home

The Holy Quran : Chapter 25: Al-Furqan الفُرقان

English Translation by Maulvi Sher Ali (ra)      اردو ترجمہ [حضرت مرزا طاہر احمد، خلیفۃ المسیح الرابع]
Get flash to see this player.

[25:38] And as to the people of Noah when they rejected the Messengers, We drowned them, and We made them a Sign for mankind. And We have prepared a painful punishment for the wrongdoers.
[25:38] اور نوح کی قوم کو بھی جب انہوں نے رسولوں کو جھٹلایا ہم نے انہیں غرق کر دیا اور انہیں ہم نے لوگوں کے لئے ایک نشان بنادیا۔ اور ظالموں کے لئے ہم نے بہت دردناک عذاب تیار کر رکھا ہے۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

[25:39] And We destroyed ‘Ad and Thamud, and the People of the Well, and many a generation between them.
[25:39] اور عاد اور ثمود اور کنویں والوں کو بھی اور بہت سی اُن قوموں کو بھی جو اس (عرصہ) کے درمیان تھیں۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

[25:40] And to each one We set forth clear similitudes; and each one We completely destroyed.
[25:40] اور ہر ایک کے لئے ہم نے (عبرت آموز) مثالیں بیان کیں اور سب کو ہم نے (بالآخر) بُری طرح ہلاک کردیا۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

[25:41] And these (Meccans) must have visited the town whereon was rained an evil rain. Have they not then seen it? Nay, they hope not to be raised after death.
[25:41] اور وہ (تیرے مخالف) ایسی بستی پر (بارہا) گزرچکے ہیں جس پر بُری بارش برسائی گئی تھی۔ پس کیا وہ اس پر غور نہ کرسکے؟ حقیقت یہ ہے کہ وہ اٹھائے جانے کی امید ہی نہیں رکھتے۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر



[25:42] And when they see thee, they only make a jest of thee: ‘Is this he whom Allah has sent as a Messenger?
[25:42] اور جب وہ تجھے دیکھتے ہیں تو تجھے محض تمسخر کا نشانہ بناتے ہیں (یہ کہتے ہوئے کہ) کیا یہ ہے وہ شخص جسے اللہ نے رسول بنا کر مبعوث کیا ہے؟
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

[25:43] ‘He indeed had well-nigh led us astray from our gods, had we not steadily adhered to them.’ And they shall know, when they see the punishment, who is most astray from the right path.
[25:43] قریب تھا کہ یہ ہمیں اپنے معبودوں سے بھٹکا دیتا اگر ہم اُن پر صبر نہ کئے رہتے۔ اور وہ ضرور جان لیں گے جب عذاب کو دیکھیں گے کہ کون راستے کے اعتبار سے سب سے زیادہ بھٹکا ہوا تھا۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

[25:44] Hast thou seen him who takes his own evil desire for his god? Couldst thou then be a guardian over him?
[25:44] کیا تُو نے اُس پر غور کیا جس نے اپنی خواہش ہی کو اپنا معبود بنا لیا۔ پس کیا توُ اس کا بھی ضامن بن سکتا ہے؟
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

[25:45] Dost thou think that most of them hear or understand? They are only like cattle — nay, they are worst astray from the path.
[25:45] کیا تو گمان کرتا ہے کہ ان میں سے اکثر سنتے ہیں یا عقل رکھتے ہیں؟ وہ نہیں ہیں مگر مویشیوں کی طرح بلکہ وہ (ان سے بھی) زیادہ راہ سے بھٹکے ہوئے ہیں۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

[25:46] Hast thou not seen how thy Lord lengthens the shade? And if He had pleased, He could have made it stationary. Then We make the sun a guide thereof.
[25:46] کیا تُو نے اپنے ربّ کی طرف نہیں دیکھا کہ وہ کیسے سائے کو پھیلاتا جاتا ہے اور اگر وہ چاہتا تو اُسے ساکِن بنا دیتا۔ پھر ہم نے سورج کو اس پر نشاندہی کرنے والا بنایا ہے۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

[25:47] Then We draw it in towards Ourself, an easy drawing in.
[25:47] پھر ہم اس (سائے) کو اپنی طرف آہستہ آہستہ سمیٹ لیتے ہیں۔
Read: Short English Commentary | Detailed English Commentary | Urdu Tafaseer اردو تفاسیر

 Previous Page
 
 
 Next Page