بِسۡمِ اللّٰہِ الرَّحۡمٰنِ الرَّحِیۡمِِ

Al Islam

The Official Website of the Ahmadiyya Muslim Community
Muslims who believe in the Messiah,
Hazrat Mirza Ghulam Ahmad Qadiani(as)Muslims who believe in the Messiah, Hazrat Mirza Ghulam Ahmad Qadiani (as), Love for All, Hatred for None.

[20:93]

قَالَ یٰہٰرُوۡنُ مَا مَنَعَکَ اِذۡ رَاَیۡتَہُمۡ ضَلُّوۡۤا ﴿ۙ۹۳﴾

English
Moses said, “O Aaron, what hindered thee, when thou didst see them gone astray,
اُردو
اس نے کہا اے ہارون! تجھے کس بات نے(ان کے مؤاخذہ سے) روکا تھا، جب تو نے انہیں دیکھا کہ وہ گمراہ ہوگئے ہیں،

[20:94]

اَلَّا تَتَّبِعَنِ ؕ اَفَعَصَیۡتَ اَمۡرِیۡ ﴿۹۴﴾

English
‘From following me? Hast thou then disobeyed my command?’
اُردو
کہ تُو میری اتّباع نہ کرتا؟ پس کیا تو نے میرے حکم کی نافرمانی کی؟

[20:95]

قَالَ یَبۡنَؤُمَّ لَا تَاۡخُذۡ بِلِحۡیَتِیۡ وَ لَا بِرَاۡسِیۡ ۚ اِنِّیۡ خَشِیۡتُ اَنۡ تَقُوۡلَ فَرَّقۡتَ بَیۡنَ بَنِیۡۤ اِسۡرَآءِیۡلَ وَ لَمۡ تَرۡقُبۡ قَوۡلِیۡ ﴿۹۵﴾

English
He answered, “O son of my mother seize me not by my beard, nor by the hair of my head. I feared lest thou shouldst say, ‘Thou hast caused a division among the children of Israel, and didst not wait for my word.’”
اُردو
اس نے کہا اے میری ماں کے بیٹے! تُو میری داڑھی اور میرا سر نہ پکڑ۔ میں تو اس بات سے ڈر گیا کہ کہیں تُو یہ نہ کہے کہ تُو نے بنی اسرائیل کے درمیان تفرقہ ڈال دیا اور میرے فیصلے کا انتظار نہ کیا۔

[20:96]

قَالَ فَمَا خَطۡبُکَ یٰسَامِرِیُّ ﴿۹۶﴾

English
Moses said, ‘And what hast thou to say, O Samiri?’
اُردو
اس نے کہا پس اے سامری! تیرا کیا معاملہ ہے؟

[20:97]

قَالَ بَصُرۡتُ بِمَا لَمۡ یَبۡصُرُوۡا بِہٖ فَقَبَضۡتُ قَبۡضَۃً مِّنۡ اَثَرِ الرَّسُوۡلِ فَنَبَذۡتُہَا وَ کَذٰلِکَ سَوَّلَتۡ لِیۡ نَفۡسِیۡ ﴿۹۷﴾

English
He said, ‘I perceived what they perceived not. I only partly received the impress of the Messenger, but that too I cast away. Thus it is that my mind commended to me.’
اُردو
اس نے کہا میں نے وہ بات جان لی تھی جسے یہ نہیں پا سکے۔ تو میں نے رسول کے نقشِ قدم سے کچھ اپنا لیا پھر اسے پھینک دیا اور میرے نفس نے میرے لئے یہی کچھ اچھا کرکے دکھایا۔

[20:98]

قَالَ فَاذۡہَبۡ فَاِنَّ لَکَ فِی الۡحَیٰوۃِ اَنۡ تَقُوۡلَ لَا مِسَاسَ ۪ وَ اِنَّ لَکَ مَوۡعِدًا لَّنۡ تُخۡلَفَہٗ ۚ وَ انۡظُرۡ اِلٰۤی اِلٰـہِکَ الَّذِیۡ ظَلۡتَ عَلَیۡہِ عَاکِفًا ؕ لَنُحَرِّقَنَّہٗ ثُمَّ لَنَنۡسِفَنَّہٗ فِی الۡیَمِّ نَسۡفًا ﴿۹۸﴾

English
Moses said, “Go away. It shall be thine to say throughout thy life, ‘Touch me not;’ and there is a promise of punishment for thee which shall not fail to be fulfilled about thee. Now look at thy god of which thou hast become a devoted worshipper. We will certainly burn it and then scatter it away into the sea.”
اُردو
اس نے کہا پس چلا جا۔ یقیناً تیرے لئے زندگی بھر یہی کہنا ہے کہ ”ہرگز نہیں چُھونا“۔ اور یقیناً تیرے لئے ایک مقررہ وقت کا وعدہ ہے جس کی تُجھ سے خلاف ورزی نہیں کی جائے گی۔ اور اپنے اس معبود کی طرف نظر کر جس کے حضور تُو بیٹھا رہا۔ ہم ضرور اُسے بھسم کردیں گے پھر اُسے سمندر میں اچھی طرح بکھیر دیں گے۔

[20:99]

اِنَّمَاۤ اِلٰـہُکُمُ اللّٰہُ الَّذِیۡ لَاۤ اِلٰہَ اِلَّا ہُوَ ؕ وَسِعَ کُلَّ شَیۡءٍ عِلۡمًا ﴿۹۹﴾

English
Your God is only Allah, beside Whom there is no God. He embraces all things in his knowledge.
اُردو
یقیناً تمہارا معبود صرف اللہ ہی ہے جس کے سوا اور کوئی معبود نہیں۔ وہ علم کے لحاظ سے ہر چیز پر حاوی ہے۔

[20:100]

کَذٰلِکَ نَقُصُّ عَلَیۡکَ مِنۡ اَنۡۢبَآءِ مَا قَدۡ سَبَقَ ۚ وَ قَدۡ اٰتَیۡنٰکَ مِنۡ لَّدُنَّا ذِکۡرًا ﴿ۖۚ۱۰۰﴾

English
Thus do We relate to thee the tidings of what has happened before. And We have given thee from Us a Reminder.
اُردو
اسی طرح ہم اُس کی خبریں تیرے سامنے بیان کرتے ہیں جو گزر چکا اور ہم نے یقیناً اپنی جناب سے تجھے ذکر عطا کیا ہے۔

[20:101]

مَنۡ اَعۡرَضَ عَنۡہُ فَاِنَّہٗ یَحۡمِلُ یَوۡمَ الۡقِیٰمَۃِ وِزۡرًا ﴿۱۰۱﴾ۙ

English
Whoso turns away from it will surely bear a heavy burden on the Day of Resurrection,
اُردو
جس نے بھی اس سے اعراض کیا تو قیامت کے دن یقیناً وہ ایک بڑا بوجھ اٹھائے گا۔

[20:102]

خٰلِدِیۡنَ فِیۡہِ ؕ وَ سَآءَ لَہُمۡ یَوۡمَ الۡقِیٰمَۃِ حِمۡلًا ﴿۱۰۲﴾ۙ

English
Abiding thereunder; and evil will the burden be to them on the Day of Resurrection,
اُردو
وہ لمبے عرصہ تک اس (حال) میں رہنے والے ہیں۔ اور وہ اُن کے لئے قیامت کے دن ایک بہت بُرا بوجھ (ثابت) ہوگا۔