In the Name of Allah, The Most Gracious, Ever Merciful.

Love for All, Hatred for None.

Browse Al Islam

[
MAY
26
]

Friday Sermon: Khilafat

Sermon Delivered by Hazrat Mirza Masroor Ahmad at Head of the Ahmadiyya Muslim Community.
  • Urdu


  • Urdu:

    Play


NOTE: Alislam Team takes full responsibility for any errors or miscommunication in this Synopsis of the Friday Sermon

  •  
]

Find by Keyword

Browse Friday Sermon by year:

http://khut.ba/26may2017


Get Friday Sermon by email http://eepurl.com/b3r4RH
Verses Cited in this Friday Sermon:
Synopsis:
  • (24:56) Allah has promised to those among you who believe and do good works that He will surely make them Successors in the earth, as He made Successors from among those who were before them; and that He will surely establish for them their religion which He has chosen for them; and that He will surely give them in exchange security and peace after their fear: They will worship Me, and they will not associate anything with Me. Then whoso is ungrateful after that, they will be the rebellious.
  • In this verse of the Holy Quran, Allah has promised Khilafat to Muslims with the conditions of faith and good actions. The Holy Prophet (sa) had foretold that Allah would re-establish the institution of Khilafat in the latter days. We see many wrong notions about Khilafat being preached today by some Muslims scholars. Some even say that there is no need for Khilafat now and that all Muslims should try to act upon Islamic teachings according to his or her understanding.
  • In the commentary of the verse of Khilafat, the Promised Messiah (as) has rejected this interpretation that the Khilafat of the Holy Prophet (sa) was only limited to 30 years. He said that how can any righteous Muslim believe that the Khilafat of Hazrat Musa continued for over 1400 years, but for the Master of all Prophets of God (sa), Allah limited it to only 30 years. This interpretation is entirely wrong.
  • Then we see some Muslims today who want to establish Khilafat through power and worldly government. These people do not understand that Allah has conditioned Khilafat in the Holy Quran with faith and good deeds. These extremist groups are supported by worldly powers which will disappear once they stop receiving their funding. They have done nothing but create chaos. For example, the recent killing of over 20 people in Manchester was absolutely brutal and has nothing to do with Islamic teachings or the institution of Khilafat. Similarly, it pains us to see thousands being killed in Muslim countries and those being killed by indiscriminate bombings of powerful nations. Following the Quran and accepting the Messiah of this age, we have sympathy for all such people.
  • The system of Khilafat is one that changes fear into peace and is a source of strengthening the faith. This is the system mentioned in Surah Jumu’ah (ch. 62) by the Holy Quran and further expounded upon by the Holy Prophet (sa) that Allah will send a reformer in latter days. He said that my Ummah is a blessed Ummah; it won’t be apparent whether its first days are more blessed or its latter days. Huzur (aba) said that that these blessed latter days will not come by following clerics and worldly leaders. This is only possible by following the Promised Messiah (as) who was sent by Allah for this purpose.
  • Ahmadis should always remember that along with the promise of Khilafat, Allah has drawn our attention towards his worship. If you will uphold your worship of God, all of your fears will be replaced with peace and harmony. We have seen the history of Khilafat-e-Ahmadiyya that God’s help has always been with the Jama’at and this help and progress continues to increase today with the message now reaching millions of people worldwide. This is all due to the promises of Allah with the Promised Messiah (as) which he has outlined in the booklet ‘the Will’.
  • The enmity of Islam and Ahmadiyyat continues to grow today, but remember that the eventual victory of Islam is decreed at the hands of the Promised Messiah (as) and Khilafat-e-Ahmadiyya. It doesn’t matter how much effort the enemies put in as they are decreed to fail.
  • May Allah enable us to increase in our worship of God so that we become part of this victory. Ameen.
  • Huzur also said that he would lead the funeral prayers of Chaudhry Hameed Ahmad sahib who passed away on May 20th 2017 after Jumu’ah prayers
  • حضورِ انور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز نے تشہد ، تعوز اور سورۃ فاتحہ کے بعد آیتِ استخلاف کی تلاوت فرمائی جس کا ترجمہ ہے: ’’[24:56] تم میں سے جو لوگ ایمان لائے اور نیک اعمال بجا لائے اُن سے اللہ نے پختہ وعدہ کیا ہے کہ انہیں ضرور زمین میں خلیفہ بنائے گا جیسا کہ اُس نے اُن سے پہلے لوگوں کو خلیفہ بنایا اور اُن کے لئے اُن کے دین کو، جو اُس نے اُن کے لئے پسند کیا، ضرور تمکنت عطا کرے گا اور اُن کی خوف کی حالت کے بعد ضرور اُنہیں امن کی حالت میں بدل دے گا۔ وہ میری عبادت کریں گے۔ میرے ساتھ کسی کو شریک نہیں ٹھہرائیں گے۔ اور جو اُس کے بعد بھی ناشکری کرے تو یہی وہ لوگ ہیں جو نافرمان ہیں۔‘‘
  • فرمایا: قرآن کریم کی اس آیت میں اللہ تعالیٰ نے خلافت کا وعدہ فرمایا ہے اور اس کی شرائط ایمان اور نیک اعمال رکھی ہیں۔ اس زمانہ کیلئے آنحضرت صلی اللہ علیہ وسلم کی پیشگوئی تھی کہ اللہ تعالیٰ مسلم اُمّہ میں دوبارہ خلافت علی منھاج النبوۃ قائم کریگا۔ آجکل مسلمان علماء میں خلافت کے متعلق بہت غلط تصورات پائے جاتے ہیں۔ بعض لوگ تو یہ بھی کہتے ہیں کہ کسی کے دین کوچھیڑو نہ اور نہ اپنا دین چھوڑو۔
  • آیتِ استخلاف کی تفسیر میں حضرت مسیح موعود علیہ السلام نے اُن لوگوں کی اس تفسیر کو رد فرمایا ہے جوکہتے ہیں کہ منکم سے مراد صحابہ ہی ہیں اور اور خلافت راشدہ انہی کے زمانہ میں ختم ہو گئی ۔آپؑ نے فرمایا کہ کسی نیک دل انسان کی کیسے یہ رائے ہوسکتی ہے کہ حضرت موسیٰ ؑکے تابعین میں تو 1400 سال تک خلافت رہی اور وہ جو کامل نبی تھا اُس کی برکات صرف اُسی زمانہ کیلئے مخصوص تھیں۔ چنانچہ یہ نہایت ہی غلط عقیدہ ہے کہ خلافت صرف 30 سال کیلئے محدود تھی۔
  • پھر بعض لوگ ایسے بھی ہیں جو دنیاوی طاقت اور زور پر خلافت قائم کرنا چاہتے ہیں ۔یہ لوگ اللہ تعالیٰ کی اس بات کو نہیں سمجھتے کہ یہ وعدہ ایمان اور نیک اعمال کے ساتھ مشروط ہے۔ ان تنظیموں کے پیچھے دنیوی طاقتیں ہیں ۔ یہ خلافت نہیں ہے بلکہ یہ شدت پسند گروہ ہیں۔ جب اِن کے دنیوی آقا اپنے دنیاوی مقاصد ملنے کے بعد اپنا ہاتھ کھینچ لیں گے تو یہ تباہ و برباد ہو جائیں گے۔ انھوں نے دنیا بھر میں صرف تباہی ہی پھیلائی ہے۔ پچھلے دنوں میں ان لوگوں نے مانچسٹر میں 20 سے زائد لوگوں کو قتل کر دیا ۔ ایسی بربریت کا اسلام یا خلافت سے کوئی تعلق نہیں ہے۔ اسی طرح جو مسلمان ممالک میں قتل و غارت ہے اور جنہیں بلا امتیاز بامبز کے ذریعہ قتل کیا جا رہا ہے ۔ ہم احمدی مسلمانوں کو قرآنی تعلیم کو سمجھتے ہوئے اور مسیح موعود علیہ السلام کو ماننے کی وجہ سے ان سے ہمدردی ہے۔
  • خلافت کا نظام تو خوف کو امن میں بدلنے والا نظام ہے اور تمکنتِ دین کا نظام ہے۔ یہ وہ نظام ہے جسکا ذکر اللہ تعالیٰ نے سورۃ جمعہ میں فرمایا اور آنحضرت صلی اللہ علیہ وسلم نے اس کی وضاحت فرمائی کہ آخری زمانہ میں تجدیدِ دین کیلئے اللہ تعالیٰ ایک مصلح کو بھیجے گا۔ آنحضرت صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا کہ میری امت ایک مبارک امت ہے۔ میری امت کا مجھے نہیں معلوم اوّل زمانہ بہتر ہے یا آخری زمانہ بہتر ہے ۔یہ آخری زمانہ ان دنیا داروں کے پیچھے چلنے سےواقع نہ ہو گا۔ یہ صرف حضرت مسیح موعود علیہ السلام کی پیروی سے ہی ممکن ہے جنکو اللہ تعالیٰ نے اسی مقصد کیلئے دنیا میں بھیجا۔آج بھی نشانات دیکھ کر لوگ اسلام احمدیت میں داخل ہو رہے ہیں۔ اور یہ انقلاب دنیا بھرمیں پھیلتا جا رہا ہے۔
  • احمدیوں کو یاد رکھنا چاہئے کہ خلافت کے وعدہ کے ساتھ اللہ تعالیٰ نے مومنین کو عبادت کی طرف توجہ دلائی ہے۔ اگر عبادت کے معیار قائم ہیں تو آپکے تمام خوف امن میں بدلتے جائیں گے۔ ہم نے خلافتِ احمدیہ کی تاریخ میں یہی دیکھا ہے کہ اللہ تعالیٰ کی نصرت ہمیشہ جماعت کے ساتھ رہی اور آج بھی یہ نصرت اور ترقی کے مناظر ہمارے سامنے ہیں۔ یہ سب کچھ اس وجہ سے ہو رہا ہے کہ حضرت مسیح موعود ؑسے خدا تعالیٰ نے وعدہ فرمایا تھا جسکی تفصیل آپ نے رسالہ الوصیت میں بیان فرمائی۔
  • اللہ تعالیٰ کا ہم پر احسان ہے کہ آپ ؑ کے وصال کے بعد خدا تعالیٰ نے پہلے خلیفہ کے ذریعہ جماعت کو سنبھال لیا ۔پھر خلیفہ ثانی ؓ کے ساتھ جب جماعت کے چند سرکردہ علیحدہ ہوگئے تو آپ نے جماعت کو سنبھال لیا ۔تیسری اور چوتھی خلافت میں بھی جماعت پر ابتلاء آئےاور پھر اب پانچویں خلافت میں مزید ترقیات مل رہی ہیں اور جماعت کا پیغام لاکھوں سے نکل کر کروڑوں میں جانے لگ گیا ہے اوراب مخالفت کئی ملکوں میں شروع ہو گئی ہے یہی سچائی کی دلیل ہے اور ترقی کی دلیل ہے ۔اللہ تعالیٰ اپنے وعدہ کے مطابق ترقیات دے رہا ہے۔ یہ سب باتیں ظاہر کر رہی ہیں کہ اسلام کا غلبہ آپ ؑ کے بعد جاری نظام خلافت سے ہی ہونا ہے ۔مخالفین جتنا چاہے زور لگا لے ان کے حصہ میں ناکامی و نامرادی ہے ۔
  • اللہ تعالیٰ ہم سب کو توفیق دے کہ ہمارے ایمان بھی مضبوط ہوں اور اعمال صالحہ بھی کرنے والے ہوں اورہم سب اعمال صالحہ میں ترقی کرتے چلے جائیں ۔آمین
  • حضرت خلیفۃ المسیح نے فرمایا کہ وہ جمعہ کی نماز کے بعد مکرم چوہدری حمید احمد صاحب کی نماز جنازہ بھی پڑھائیں گے ۔ آپ کی وفات 20 مئی 2017 کو ہوئی۔
About Friday Sermon

The Jumu'ah (Friday) prayer is one form of congregational worship in Islam. It takes place every Friday. Regular attendance at the Jumu'ah prayer is enjoined on the believer. According to a Saying of Muhammadsa this congregational prayer is twenty-five times more blessed than worship performed alone. (Bukhari)

Friday Sermons in the Quran

“O ye who believe! When the call is made for Prayer on Friday, hasten to the remembrance of Allah, and leave off all business. That is best for you, if you only knew.” more

Friday Sermons in the Hadith

“… (He who) offers the Prayers and listens quitely when the Imam stands up for sermon, will have his sins forgiven between that Friday and the next”(Bukhari)